ساؤتھ ایشین فلم فیسٹیول میں پاکستانی فلمیں دکھائی جا ئیں گی

0
206

امریکا میں 25 روزہ 13واں تصویر ساؤتھ ایشین انٹرنیشنل فلم فیسٹیول 2018 کا آغاز ہوگیا جس میں پاکستانی فلموں کی بھی نمائش ہوگی ۔

تفصیلات کے مطابق فیسٹیول کا آغاز آسکر ایوارڈ یافتہ ہدایتکارہ شرمین عبید چنائے کی فلم سے ہوا ۔ خیلا رہے کہ فیسٹیول میں ہر سال ایک ملک کو فوکس کیا جاتا ہے اور فلموں کے ذریعے اس ملک کا کلچر، پس منظر ، معاشرتی اقدار و مسائل کو اجاگر کیا جاتا ہے اس بار یہ اعزاز پاکستان کو حاصل ہوا ہے ۔ فیسٹیول کی نو می تھیم ہے ۔

شرمین عبید چنائے نے فیسٹیول کے تعارفی سیشن سے خطاب کیا اسی روزانکی دستاویزی فلم ’آ گرل ان دا ریور‘دکھائی گئی اس کےساتھ ان کی آنےوالی فلموں کی جھلکیاں بھی دکھائی گئیں ۔
فیسٹیول کے دوران 28 ستمبر کو ریڈ کارپٹ پر پاکستانی فلم ’کیک‘ کو خصوصی اہمیت دی جائےگی ۔ فلم کے ہدایتکار عاصم عباسی سمیت فنکار آمنہ شیخ اور صنم سعید بھی تقریب میں شرکت کریں گے ۔

فیسٹیول میں ہر سال ایک فلم کو سال کی خاص فلم قرار دیا جاتا ہے اس بار یہ اعزاز فلم ’کیک‘ کو ملنے کی امید ہے ۔ہدایتکارہ مہرین جبارکی فلم ’ لالہ بیگم‘ 29 ستمبر کو دکھائی جائےگی جو اب تک ملکی سینما گھروں میں نمائش پذیر نہیں ہوئی لیکن مختلف فلم فیسٹیولز میں دکھائی جاچکی ہے اس روز مہرین جبار بھی موجود ہوں گی۔فلم میں مرکزی کردار سونیا رحمناور مرینہ خان نے اداکئے ہیں۔

ان فلموں کے علاوہ پاکستان سے دیگر فلمیں بھی اس فیسٹیول کا حصہ ہیں جن میں شرمین عبید چنائے کی دوسری فلم ’لک بٹ ود لو‘ ، سرمد مسعود کی فلم ’ مائی پیور لینڈ ‘ اور علی اسامہ باجوہ کی فلم ’ گورکھ دھندا‘ وغیرہ شامل ہیں۔امریکا کے مختلف شہروں میں دکھائی جانےوالی 60 فلموں کے فیسٹیول میں تقریبا 3 ہزار شرکاموجود ہوں گے ،تقریب کا اختتام مصری فلم ’پٹاخ‘ اور میوزیکل گالا شو سے ہوگا۔

LEAVE A REPLY