سابق وزیرِ اعلیٰ سندھ قائم علی شاہ نے نیب کے سامنے پیش ہونے سے انکار کردیا

0
333

کراچی: سندھ کے سابق وزیراعلیٰ قائم علی شاہ نے زمین کی الاٹمنٹ کے کیس میں نیب کے سامنے پیش ہونے سے انکار کردیا۔

ذرائع کے مطابق نیب ملیر ڈیولپمنٹ اتھارٹی میں زمین کی غیر قانونی الاٹمنٹ اور اس سے متعلقہ گھپلوں سے متعلق کیس کی تفتیش کررہی ہے اور اس سلسلے میں سابق وزیراعلیٰ سندھ قائم علی شاہ کو تفتیش کے لیے آج طلب کیا گیا تھا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ قائم علی شاہ نے نیب حکام کے سامنے پیش ہونے سے انکار کردیا ہے اور نیب کے تفتیشی افسر پر عدم تحفظات کا اظہار بھی کیا ہے۔

قائم علی شاہ نے یہ مؤقف اپنایا ہے کہ نیب کے افسران انکو ذاتی رنجش کا نشانہ بنا رہے ہیں، اس لیے وہ نیب کے روبرو پیش ہونے سے پہلے اس معاملے پر پہلے عدالت سے رجوع کریں گے۔

نیب ذرائع کے مطابق ملیر ڈیولپمنٹ اتھارٹی میں زمین کی الاٹمنٹ سے متعلق جو دو رپورٹس پہلے پیش ہوئیں ان میں قائم علی شاہ کا نام نہیں تھا تاہم تیسری رپورٹ میں انکا نام موجود ہے جسکی وجہ سے انکو طلب کیا گیا ہے۔

LEAVE A REPLY