بسنت کا خونی کھیل جاری، ہوائی فائرنگ، 132 پتنگ باز گرفتار

0
201

فیصل آباد میں خونی کھیل دھڑلے سے جاری ہے، منچلوں نے حکومت پابندیوں کو بو کاٹا کر دیا۔ ہوائی فائرنگ کا سلسلہ بھی جاری رہا، پتنگ بازی کے دوران کرنٹ لگنے سے ایک نوجوان دم توڑ گیا۔ سی ٹی ڈی اہلکار ڈور پھرنے اور 13سالہ لڑکا چھت سے گرنے کے باعث زخمی ہوگیا۔ انتظامیہ نے کریک ڈاؤن کرتے ہوئے 132پتنگ بازوں کو گرفتار کرلیا۔

لوگوں کے گلے کاٹنے کی کھلی اجازت، فیصل آباد میں خونی کھیل زندگیاں نگلنے لگا، حکومت نے آنکھیں بند کر لیں۔ انتظامیہ بھی بے بس، شہر میں پتنگ بازی کا سلسلہ زور و شور سے جاری ہے، کوئی روکنے والا نہیں۔

سرگودھا روڈ پر پتنگ بازی کے دوران کرنٹ لگنے سے 30 سالہ شکیل زندگی کی بازی ہار گیا جبکہ سی ٹی ڈی اہلکار کیمیکل ڈور ہیلمٹ میں پھنسنے اور 13سالہ لڑکا پتنگ پکڑتے ہوئے چھت سے گر کر زخمی ہو گیا۔ زخمیوں کو طبی امداد کیلئے ہسپتال منتقل کردیا گیا۔

شہر بھر میں پتنگ بازوں نے حکومتی پابندیوں کو نظرانداز کر دیا، سر عام قانون کی دھجیاں بکھیری جا رہی ہیں۔ دن ہو یا رات ہوائی فائرنگ کا سلسلہ جاری ہے۔ بعض شہریوں نے خونی کھیل کی مذمت کی اور قانون پر مکمل عملدرآمد کا مطالبہ کیا۔ دوسری طرف فیصل آباد میں پتنگ بازوں کیخلاف نمائشی کریک ڈاؤن بھی جاری ہے جس میں 132 پتنگ بازوں کو گرفتار کیا گیا، پولیس نے 209 چرخیاں اور 3 ہزار 39 پتنگیں قبضے میں لے کر مقدمات درج کر لئے۔

LEAVE A REPLY