مسلم لیگ ق سے کوئی اختلاف نہیں ہے، نعیم الحق

0
95

لاہور: وزیراعظم کے معاون خصوصی اور پاکستان تحریک انصاف کے رہنما نعیم الحق نے مسلم لیگ ق کے سربراہ چوہدری شجاعت حسین سے ملاقات کی ہے۔

ملاقات میں مونس الہیٰ، آغا کامل علی، چوہدری سالک حسین، حسین الہی اور باو رضوان بھی موجود تھے

ملاقات میں اتحادی حکومت کے معاملات کو اتفاق رائے سے آگے بڑھانے کا فیصلہ کیا گیا، جبکہ اتفاق کیا گیا کہ پنجاب کے بعد مرکز میں شراکت اقتدار کے معاہدے پرعمل درآمد ہو گا۔

ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو میں نعیم الحق کا کہنا تھا کہ  مسلم لیگ ق ہمارے حلیف جماعت ہے اور ہمارے درمیان کوئی اختلاف نہیں ہے۔ کچھ لوگ رخنہ ڈالنا چاہتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ق ہماری حلیف جماعت ہے اور رہے گی اور میں وزیر اعظم عمران خان کی ہدایت پر ہی چوہدری شجاعت حسین سے ملاقات کرنے آیا ہوں۔

ایک سوال کے جواب میں نعیم الحق نے کہا کہ قومی احتساب بیورو (نیب) اپنا کام کر رہا ہے تاہم بزنس کمیونٹی نیب سے متعلق شکایات کر رہی ہے۔ نیب کی کارکردگی میں بہتری کی ضرورت ہے۔

اس موقع پر چوہدری شجاعت حسین نے کہا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کے خلاف کوئی سازش نہیں ہو رہی ہے جب کہ ہم نے عہد کیا ہوا ہے کہ حکومت کے ساتھ چلیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ہمارا جتنا حق تھا وہ عمران خان نے ہمیں دے دیا ہے۔ ہمارے درمیان کوئی اختلاف نہیں ہے۔

LEAVE A REPLY