شہباز شریف کو پی اے سی سے ہٹایا گیا تو حالات خراب ہونگے، خواجہ آصف

0
154

سیالکوٹ: رہنما مسلم لیگ ن خواجہ محمد آصف نے کہا ہے کہ شہباز شریف کو پی اے سی کی چیئرمین شپ سے ہٹایا گیا تو حالات خراب ہو جائیں گے

سیالکوٹ میں اپنی رہائش گاہ پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا خواجہ آصف نے کہا کہ حکومت میں بیٹھے لوگ خود اپنی ساکھ خراب کر رہے ہیں ان کو کسی دشمن کی ضرورت نہیں ہے جب کہ وزیر اعظم نے گزشتہ روز جو زبان استعمال کی اس سے ان کی جنجھلاہٹ نظر آرہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس وقت سسٹم کو حکمرانوں سے خطرہ ہے جب کہ حکمرانوں کے طرز سے پارلیمنٹ اور ملک کو خطرہ ہے اور عمران خان اور وزراء نے جو ماحول بنا دیا ہے اس سے بیورو کریسی کام کرنا چھوڑ دے گی۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان نے تو آئی ایم ایف کے پاس جانے پر خودکشی کا اعلان کیا تھا جب کہ پہلی دفعہ کوئی وزیر اعظم خود آئی ایم ایف سے بھینک مانگنے جا رہا ہے۔

خواجہ آصف نے کہا کہ نواز شریف کی صحت کے بارے تاثر دینے کی کوشش کی جارہی ہے کہ شاید ہم کوئی رعایت چاہتے ہیں جب کہ ڈاکٹروں کی رپورٹ کے مطابق میاں صاحب کو دل کی تکلیف ہے لیکن حکومت میاں صاحب کی بیماری کو ایشو بنا کر سیاسی فائدہ اٹھانا چاہتی ہے۔

شہباز شریف کے حوالے سے بات کرتے ہوئے خواجہ محمد آصف نے کہا کہ وزیر اعظم اور دیگر وزرا پبلک اکاؤنٹس کمیٹی (پی اے سی) کے چئیرمین شہباز شریف کو ہٹانے کی باتیں کر رہے ہیں اوراگر شہباز شریف کو چیئرمین شپ سے ہٹایا گیا تو حالات خراب ہو جائیں گے۔

LEAVE A REPLY