ملٹری لینڈ پر قائم شادی ہالز، سیکرٹری دفاع لالی پاپ نہیں دیں،سپریم کورٹ

0
136

کراچی: سپریم کورٹ رجسٹری نے کراچی کی ملٹری لینڈ پر قائم شادی ہالز اورتجارتی مراکز فوری گرانے کا حکم دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق ملٹری لینڈ پر شادی ہالز اور تجارتی سرگرمیوں کے معاملے پر سپریم کورٹ رجسٹری نے سیکریٹری دفاع کی رپورٹ مسترد کرتے ہوئے ملٹری لینڈ اور کنٹونمٹس سے تمام تجارتی سرگرمیاں ختم کرنے کاحکم دے دیا۔

عدالت نے شادی ہالز اور تجارتی مراکز گرانے کے حکم پر فوری عملدرآمد کا حکم دے دیا جبکہ کالا پْل پر گلوبل مارکی، واٹربورڈ آفیسرز کلب کے انہدام کیخلاف نظرثانی کی درخواستیں بھی مسترد کردی۔

سیکریٹری دفاع سے مکالمہ میں جسٹس گلزار احمد نے کہا کہ آپ اس رپورٹ میں ہمیں لالی پاپ دینا چاہتے ہیں؟ آپ کو معلوم ہے عدالتی حکم کی خلاف ورزی کورٹ مارشل ہے، جس پر سیکریٹری دفاع نے کہا کہ ہم عمل درآمد کررہے ہیں۔

جسٹس گلزار احمد نے کہا کہ آپ اسلام آباد میں ہوتے ہیں اس لیے آپ کوکچھ نہیں معلوم، جب عمل نہیں کرنا تو آئین کا کیا فائدہ، ریاست کے3ستون ہوتے ہیں آپ کو معلوم ہونا چاہئے، یہ بچکانہ قسم کی رپورٹ ہمیں نہیں چاہیے۔

جسٹس گلزار احمد نے ڈی جی ایس بی اے افتخار قائم خانی پر سخت اظہار برہمی کرتے ہوئے کہا کہ آپ کورٹ سے جیل جائیں گے، ہم نے حکم دیا تھا کہ کراچی سے غیر قانونی تجاویزات ختم کروائیں اس کا کیا ہوا؟ کارروائی کہاں تک پہنچی؟، غیر قانونی تجاویزات کو ختم کریں یہ سپریم کورٹ کا حکم ہے اور اس پر عمل کریں۔

LEAVE A REPLY