ایف بی آر کا نام تبدیل کرنے کا فیصلہ، ذرائع

0
93

لاہور: پاکستان تحریکِ انصاف کی وفاقی حکومت نے فیڈرل بورڈ آف ریوینیو (ایف بی آر) کا نام تبدیل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق وفاقی حکومت نے ایف بی آر کا نام تبدیل کرکے پاکستان ریوینیو اتھارٹی رکھنے کی تجویز 3 آکتوبر کو وفاقی کابینہ کو بھجوائی گئی ہے۔

نام کی تبدیلی کی ساتھ ساتھ ایف بی آر کے اسٹرکچر میں بھی تبدیلیوں کا فیصلہ کیا گیا ہے جسکے تحت ان ادارے میں ایک چیئرمین، دو ڈپٹی چیئرمین، ایک ڈپٹی چیئرمین آئی آر ایس اور دوسرا ڈپٹی چیئرمین کسٹمز ہونگے۔

دوسری جانب ایف بی آر کے 22 ہزار میں سے 11 ہزار ملازمین کو سرپلس پول بھیجنے پر بھی غور کیا جارہا ہے جس سے ملازمین میں شدید تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے۔

ملازمین نے یہ واضح کیا ہے کہ وفاقی حکومت کے کسی بھی ایسے اقدام کو قبول نہیں کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ 1979ع میں قائم ہونے والے سینٹرل بورڈ آف ریوینیو کا نام 2007ع میں تبدیل کرکے ایف بی آر رکھا گیا تھا۔

LEAVE A REPLY